ادارے جعلی حکومت کی پشت پناہی چھوڑ دیں، پاکستان میں صدارتی نظام نہیں آنے دیں گے: مولانا فضل الرحمان

ادارے جعلی حکومت کی پشت پناہی چھوڑ دیں، پاکستان میں صدارتی نظام نہیں آنے دیں گے: مولانا فضل الرحمان


ادارے جعلی حکومت کی پشت پناہی چھوڑ دیں، پاکستان میں صدارتی نظام نہیں آنے دیں …

جمرود (ڈیلی پاکستان آن لائن) جمعیت علماءاسلام کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کا کہنا ہے کہ ادارے جعلی حکومت کی پشت پناہی چھوڑ دیں، ہم اسرائیل کو تسلیم کرنے کی اجازت نہیں دیں گے، پاکستان میں صدارتی نظام نہیں آنے دیں گے۔

جمعیت علماءاسلام کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے ملین مارچ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ موجودہ حکومت ناکام ہوچکی ہے حکمران عوام کوگمراہ کرناچاہتے ہیں،ہم اداروں کو اس ملک کیلئے ناگزیر سمجھتے ہیں لیکن یہ کہنا چاہتے ہیں کہ جعلی حکومت کی پشت پناہی مت کرو، قوم آپ کا احترام کرتی ہے تو آپ بھی قوم کے جذبے کا احترام کریں ، قوم آپ سے لڑنا نہیں چاہتی آپ بھی قوم سے مت لڑیں۔ انہوں نے کہا کہ دینی مدارس پرکوئی پابندی نہیں لگاسکتا، اسرائیل کو تسلیم کرنے کی اجازت نہیں دیں گے۔

مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ ملک میں صدارتی نظام لانے کی باتیں کی جارہی ہیں جو کہ آمریت کی علامت ہے ، ہم اسے بحال نہیں ہونے دیں گے۔ 18 ویں ترمیم کو چھیڑا گیا تو یہ صوبوں کے حقوق پر ڈاکہ ڈالنے کی کوشش ہوگی، 18 ویں ترمیم کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کو ہم تسلیم نہیں کریں گے۔

مزید : قومی /علاقائی /FATA /خیبر



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے