او آئی سی نے کشمیر میں آبادی کے تناسب میں غیرقانونی تبدیلی کی کوشش مستردکردی

او آئی سی نے کشمیر میں آبادی کے تناسب میں غیرقانونی تبدیلی کی کوشش مستردکردی


او آئی سی نے کشمیر میں آبادی کے تناسب میں غیرقانونی تبدیلی کی کوشش مستردکردی

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)او آئی سی نے کشمیر میں آبادی کے تناسب میں غیرقانونی تبدیلی کی کوشش مستردکرتے ہوئے کہاہے کہ عالمی برادری موجودہ صورتحال کا نوٹس لے اورسکیورٹی کونسل کی قراردادوں کے مطابق مسئلہ کشمیر حل کیا جائے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق او آئی سی جنرل سیکرٹریٹ نے مقبوضہ کشمیر تنظیم نوآرڈر2020 پرتحفظات کااظہارکرتے ہوئے کہاہے کہ مقبوضہ کشمیرمیں بھارت کانیاڈومیسائل ق±انون صورتحال کومزیدخراب کرےگا،5اگست2019 کے یکطرفہ بھارتی اقدامات نے پہلے ہی مقبوضہ کشمیرکی صورتحال خراب کررکھی ہے،

اوآئی سی سیکرٹریٹ کی جانب سے جاری بیان میں کہاگیاہے کہ جموں وکشمیرمیں آبادی کاتناسب تبدیل کرنے کی غیرقانونی کوششیں مستردکرتے ہیں اورجموں وکشمیرکے عوام کےساتھ بھرپوراظہاریکجہتی کرتے ہیں

او آئی سی نے کہا ہے کہ اقوام متحدہ کی قراردادوں کی روشنی میں جموں وکشمیر متنازع علاقہ ہے،عالمی برادری موجودہ صورتحال کا نوٹس لے اورسکیورٹی کونسل کی قراردادوں کے مطابق مسئلہ کشمیرحل کیاجائے۔

مزید : اہم خبریں /قومی /علاقائی /اسلام آباد



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے