بلوچستان حکومت نے لاک ڈاؤن میں مزید 2 ہفتوں کی توسیع کردی

بلوچستان حکومت نے لاک ڈاؤن میں مزید 2 ہفتوں کی توسیع کردی


بلوچستان حکومت نے لاک ڈاؤن میں مزید 2 ہفتوں کی توسیع کردی

کوئٹہ(ڈیلی پاکستان آن لائن) بلوچستان حکومت کی جانب سے لاک ڈاؤن میں مزید 2 ہفتوں کی توسیع کردی گئی۔

تفصیلات کے مطابق کرونا وائرس کے پیش نظر بلوچستان حکومت نے لاک ڈاؤن میں 21 اپریل تک توسیع کردی جس کا نوٹیفکیشن بھی جاری کردیا گیا ہے۔

وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال کی زیر صدارت اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ لاک ڈاؤن میں 2 ہفتوں کی توسیع کرکے اسے 21 اپریل تک بڑھایا جائے گا جبکہ کوئٹہ میں دفعہ 144 نافذ کرکے موٹر سائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی عائد کردی گئی ہے۔

اجلاس میں کرونا وائرس کے منفی اثرات کے تناظر میں مختلف صوبائی ٹیکسوں پر چھوٹ کی منظوری بھی دی گئی۔ذرائع کے مطابق 30 جون 2020 تک تعمیرات ، ٹرانسپورٹ کے لیے سیلز ٹیکس، 30 جون تک ہوٹل کے شعبوں پر بلوچستان سیلز ٹیکس آن سروسز کی چھوٹ کی منظوری دی گئی۔اسی طرح معدنی پیداوار پر رائلٹی رینٹ اور فیس میں اضافے کے نوٹیفکیشن اور بلوچستان الیکٹریسٹی ڈیوٹی کی وصولی کی معطلی کی منظوری دی گئی۔

واضح رہے کہ پاکستان میں کرونا وائرس کے مریضوں کی تعداد بڑھ کر 3 ہزار 505 ہو گئی ہے، جبکہ وائرس سے اموات 50 تک پہنچ گئیں۔نیشنل کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر کے مطابق ملک بھر میں کرونا وائرس کے نئے کیسز کے ساتھ ساتھ اموات بھی بڑھتی جا رہی ہیں، پنجاب میں کیسز کی تعداد بڑھ کر 1708 اور سندھ میں 881 ہو گئی ہے۔

نیشنل کمانڈ سینٹر کا کہنا ہے خیبر پختونخوا میں 405 اور بلوچستان میں 202 کرونا کے تصدیق شدہ مریض ہیں، گلگت بلتستان میں 211، اسلام آباد 82، آزاد کشمیر میں 16 مریض ہیں۔نیشنل کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر کے مطابق 17 مریضوں کی حالت تشویش ناک ہے جبکہ کرونا وائرس سے صحت یاب ہونے والے مریضوں کی تعداد 259 ہوگئی۔

مزید : اہم خبریں /قومی /علاقائی /بلوچستان /کوئٹہ



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے