بل گیٹس کی بیگم ملنڈا گیٹس نے کورونا وائرس کے بارے میں انتہائی پریشان کن پیشنگوئی کردی

بل گیٹس کی بیگم ملنڈا گیٹس نے کورونا وائرس کے بارے میں انتہائی پریشان کن پیشنگوئی کردی


بل گیٹس کی بیگم ملنڈا گیٹس نے کورونا وائرس کے بارے میں انتہائی پریشان کن …

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) مائیکروسافٹ کے بانی بل گیٹس کی اہلیہ ملنڈا گیٹس نے کورونا وائرس کے متعلق انتہائی پریشان کن پیش گوئی کر دی ہے۔ میل آن لائن کے مطابق ملنڈا گیٹس نے بتایا ہے کہ کورونا وائرس کی وباءکے متعلق یہ تاثر غلط پایا جا رہا ہے کہ یہ ایک بار ختم ہو گئی تو پھر کبھی نہیں آئے گی۔ مستقبل میں یہ وباءنہ صرف بار بار آسکتی ہے بلکہ اس سے زیادہ خوفناک تباہی بھی لا سکتی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ یہ وباءہماری دنیا کو یکسر تبدیل کرکے رکھ دے گی۔

ملنڈا گیٹس کا کہنا تھا کہ ”کورونا وائرس کی کوئی ویکسین آنے میں کم از کم 18ماہ کا عرصہ لگ سکتا ہے اور تمام عرصہ ہمیں اس وباءکے خوف میں گزارنا ہو گا کیونکہ ایک بار خاتمے کے بعد بھی اس کے دوبارہ پھوٹ نکلنے کا غالب امکان ہو گا۔ یہ وائرس ’سپینش فلو‘ کے جیسا نہیں ہے جو ایک بار آیا اور ختم ہو گیا تھا۔ یہ بار بار آتا رہے گا اور یہ بھی امکان ہے کہ ہم اپنی زندگی میں ایسی ہی مزید وبائیں بھی دیکھیں۔“

ان کا کہنا تھا کہ ”میں اور بل گیٹس طویل عرصے سے دنیا کو ایسی ہی وباءسے متنبہ کرتے آ رہے تھے اور بتاتے آ رہے تھے کہ اس طرح کی وباءکا خطرہ ہے اور دنیا کو اس کے لیے تیار رہنا چاہیے۔ اگر تیاری نہ ہوئی تو بڑی تباہی ہوگی اور آج ہم وہی کچھ دیکھ رہے ہیں۔دنیا کورونا وائرس کے لیے بالکل بھی تیار نہیں تھی جس کی وجہ سے یہ وباءاتنی بڑی تباہی پھیلا رہی ہے۔“

مزید : بین الاقوامی



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے