حکومت نے تمام حدیں پار کردیں، حفاظتی سامان نہ ملنے پر احتجاج کرنے والے ڈاکٹرز کو تشدد کے بعد گرفتار کرلیا گیا

حکومت نے تمام حدیں پار کردیں، حفاظتی سامان نہ ملنے پر احتجاج کرنے والے ڈاکٹرز کو تشدد کے بعد گرفتار کرلیا گیا


حکومت نے تمام حدیں پار کردیں، حفاظتی سامان نہ ملنے پر احتجاج کرنے والے …

کوئٹہ (ڈیلی پاکستان آن لائن)کوئٹہ میں پولیس نے حفاظتی کٹس کی عدم فراہمی کیخلاف احتجاج کرنے والے ینگ ڈاکٹرز کو تشدد کانشانہ بنا ڈالا ،جس سے متعدد زخمی ہو گئے جبکہ درجنوں ڈاکٹروں کو حراست میں لے لیاگیا،ینگ ڈاکٹرز نے پولیس تشدد پرتمام سروسز کا بائیکاٹ کردیا۔

میڈیارپورٹس کے مطابق کوئٹہ میں ینگ ڈاکٹرز کورونا وائرس سے بچاﺅ کیلئے حفاظتی کٹس کی عدم فراہمی پر احتجاج کررہے تھے،ینگ ڈاکٹرز نے وزیراعلیٰ ہاﺅس کی جانب مارچ شروع کیاتو پولیس نے ینگ ڈاکٹر ز پر لاٹھی چارج شروع کردیاجس پر متعدد ڈاکٹرز زخمی ہو گئے،پولیس نے 50 سے زائد ڈاکٹرز اور پیرامیڈیکس کو گرفتار کرلیا۔

ینگ ڈاکٹرز نے تمام سروسز کے بائیکاٹ کا اعلان کردیا،ینگ ڈاکٹرز نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہاکہ اگر یہی ہماری سروسز کاصلہ ہے تو آج سے تمام سروسز کا بائیکاٹ کرتے ہیں،ان حالات میں سروسز دینا ہمارے لئے مشکل ہو گیا ہے ،انہوں نے کہاکہ مذاکرات کیلئے تیار نہیں ہم اب سروسز نہیں دیں گے ۔

مزید : قومی /علاقائی /بلوچستان /کوئٹہ



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے