دعوت اسلامی کی جانب سے لاک ڈائون کی وجہ سے روزانہ اجرت پر کام کرنے والے مستحقین خاندانوں میں امدادی راشن بیگ تقسیم

دعوت اسلامی کی جانب سے لاک ڈائون کی وجہ سے روزانہ اجرت پر کام کرنے والے مستحقین خاندانوں میں امدادی راشن بیگ تقسیم


دعوت اسلامی کی جانب سے لاک ڈائون کی وجہ سے روزانہ اجرت پر کام کرنے والے …

عمرکوٹ(سید  ریحان  شبیر  ) دعوت اسلامی تھر زون عمرکوٹ  کی جانب سے 20 دنوں سے مسلسل لاک ڈاؤن کی وجہ سے روزانہ اجرت پر کام کرنے والے اور مستحقین خاندانوں میں امدادی راشن بیگ تقسیم کیے جانے کا سلسلہ جاری ہے  اس وقت تک سترہ سو مستحقین خاندانوں میں راشن بیگ تقسیم کیے جارہے  ہیں قاری میر حسن عطاری۔

  تفصیلات کے مطابق جس دن سے پاکستان میں کورونا وائرس کی وبا کے پھیلنے کا خدشہ ظاہر ہوا ہے تب سے پورے ملک میں لاک ڈائون کی صورتحال ہے جس کی وجہ سے سندھ کے پسماندہ علاقے ضلع عمرکوٹ میں کئی خاندان ایسے  ہیں جوکہ روزانہ اجرت پر کام کرنےوالے تھے اور روزانہ کما کر اپنے بچوں کا پیٹ پال رہے تھے وہ انتہائی مشکل حالات میں مجبور ہوکر رہ گئے ہیں جبکہ ایسے میں عاشقان رسول کی مدنی تحریک دعوت اسلامی  تھر زون ضلع عمرکوٹ کیجانب سے ان غریب مستحق و روزانہ اجرت پر کام کرنےوالے افراد کی کفالت کا ذمہ اُٹھایا اور اس مشکل کی گھڑی مخیرحضرات سے مل کر اب تک سترہ سو خاندانوں میں راشن بیگ جس میں ضروریات زندگی کی اشیاء آٹا چاول دالیں گھی چائے صابن  سمیت مصالہ جات وغیرہ شامل ہیں تقسیم کئے جارہےہیں۔

اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتےہوئے دعوت اسلامی تھر زون کے نگران قاری میرحسن عطاری نے کہا کہ دعوت اسلامی کے بانی امیر اہلسنت مولانا الیاس قادری کے حکم پر کوروناوائرس کے باعث کیئےجانےوالے لاک ڈائون میں محصور ہونےوالے روزانہ اجرت پر کام کرنے والے اور مستحقین کی امداد کرنےکا سلسلہ شروع کردیا ہے عمرکوٹ اور تھرپارکر اضلاع میں دعوت اسلامی کی جانب سے سترہ سو خاندانوں میں راش بیگ تقسیم کرنےکا سلسلہ جاری  و ساری ہے اس کےساتھ نقدی رقم بھی دی جارہی تاکہ وہ خود سے اپنے لیئے کچھ چیزیں خرید کرسکتے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ دعوت اسلامی نے ہمیشہ عوام الناس کی خدمت اور انکی بھلائی کیلِئے بڑھ چڑھ کر حصہ لیا ہے انکا مزید کہناتھاکہ لاک ڈائون کی وجہ سے تھلیسیمیا کی بیماری میں مبتلا بچوں کو خون کے عطیات کا بھی سلسلہ شروع کردیا گیا ہے کیوں کہ اس مشکل صورتحال میں ہر کوئی اپنے گھروں تک محدود ہوکر رہ گیا ہے اور تھلیسیمیا میں مبتلا بچوں کو خون کی رسائی نہیں ہو پارہی تھی اس لیئے دعوت اسلامی نے یہ بھی ذمہ داری اپنے سر لےلی ہے اور انکی ضروریات کو پوری کرنے کی بھرپور کوششیں کررہےہیں قاری میرحسن عطاری نے عوام کو اپنے گھروں تک رہنے کی تلقین کرتےہوئے کہا کہ کورونا جسی وبا کو گھر بیٹھ کر ہی شکست دی جاسکتی ہےاس لیئے عوام اپنے بچوں کی بھلائی اور روشن مستقبل کیئے اس وبا سے بچنے کیلئے دی گئی تدابیر پر عمل کریں آخر میں انہوں نے کہا کہ کوئی مخیرخضرات کارخیر میں حصہ ڈالنا چاہیئے تو بیشک ہم سے رابط کرسکتاہے ۔

مزید : علاقائی /سندھ /عمرکوٹ



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے