دیس بدیس کے کھانے – ایکسپریس اردو

دیس بدیس کے کھانے - ایکسپریس اردو


بنائیے اپنی پسند کے مصالحہ دار پکوان۔ فوٹو: فائل

مسالا دار بھنی ہوئی کلیجی
اجزا:
کلیجی اور پھیپھڑے( ایک عدد)
پسی ہوئی لال مرچ(حسب ذائقہ)
نمک( حسب ذائقہ)
پسا ہوا گرم مسالا( 10 گرام)
سفید زیرہ(10 گرام)
پسا ہوا خشک دھنیا( آدھا پائو)
لہسن(12 جوے)
پیاز (تین عدد)
ٹماٹر( چار عدد)
گھی( حسب ضرورت)

ترکیب:
یہ سالن پانی کے بغیر تیار کیا جاتا ہے۔ صرف کلیجی کے ٹکڑے اور لہسن کے جوے پانی میں ہوں گے۔ اسی طرح اس میں شوربا بھی نہیں رکھنا۔ صرف مسالے میں پانی ملانا ہوتا ہے۔ کلیجی اور پھیپھڑے کے ٹکڑے چھوٹے چھوٹے اور پتلے پتلے کاٹ لیں اور انہیں پانی میں مع لہسن ہلکا سا ابال لیں پھر آدھی پیاز ، لال مرچیں، سفید زیرہ، سوکھا دھنیا ، لہسن کے ابلے ہوئے جوئے لے کر سل پر پیس کر ان میں تھوڑا سا پانی ملاکر مسالا کو اتنا پتلا کرلیں کہ کلیجی اور پھیپھڑے کے ٹکڑوں پر آسانی سے لیپا جاسکے۔

(مسالا ہر ٹکڑے پر اس کے دونوں طرف اچھی طرح سے لیپنا چاہیے۔) اب گھی چوڑے پیندے کی ایک پتیلی میں ڈال کر اسے چولھے پر چڑھائیں اور کڑکڑائیں پھر کلیجی کے مصالحے لگے ہوئے پارچے اس میں آہستہ آہستہ رکھ کر انہیں تلیں۔ یہ سالن کوئلوں پر پکایا جاتا ہے اور آنچ ہلکی رکھی جاتی ہے جب کلیجی کے ٹکڑے خوب اچھی طرح پک جائیں، پتیلی چولہے سے اتارکر باقی پیاز اور ٹماٹر کے گول کاٹے ہوئے ٹکڑوں کے ساتھ تناول فرمائیں۔

قیمہ بھری گوبھی
اجزا:
بند گوبھی( (کرم کلہ) ایک عدد
بڑے گوشت کا قیمہ (آدھا کلو)
پیاز(تین پائو)
لال مرچ( ایک چھٹانک)
ہلدی( ایک تولہ)
پسا ہوا دھنیا(10 گرام)
ادرک( آدھا ٹکڑا)
ثابت گرم مسالا( پائو چھٹانک)
نمک( حسب ذائقہ)

ترکیب:
قیمہ میں تھوڑا سا نمک اور آدھا گرم مسالا ملاکر رکھ دیجئے پھر گھی کڑکڑاتے ہوئے اس میں پیاز کے لچھے تھوڑے سے لال کرلیجیے، اس کے بعد قیمہ گھی میں بھون کر سرخ کرلیں، اس کے بعد پتیلی سے نکال کر کسی پلیٹ میں رکھ لجیے۔ اسی طرح بند گوبھی کے پتوں کو بھی پانی میں (جس کی مقدار زیادہ نہ ہو) صرف اتنا بال کر کہ یہ ذرا ذرا نرم پڑجائیں۔ پانی سے نکال کرالگ رکھ لیجیے۔

اب باقی گرم مسالا پیس کر اس کی آدھی مقدار بھنے ہوئے قیمے میں ملادیجیے۔ (گرم مسالا بہت باریک پیسنا چاہیے) پیاز اور ادرک کو بہت باریک کترکر ان میں دھنیا ملاکے نصف گوبھی کے ابلے ہوئے پتوں پر تہہ کی شکل میں جمادیں۔ اس تہہ پر بھنا ہوا قیمہ پچھادیں۔ قیمہ کے اوپر دھنیے پیاز اور ادرک کی بقیہ آدھی مقدار کی تہہ جمائیں اور پھر پتوں کو دھاگے سے باندھ دیں۔ اب گرم مسالے کی بقیہ مقدار کو گھی میں بھونیں اور دھاگا لپٹتے ہوئے پتے اس گھی میں تلیں۔ آنچ دھیمی رکھیں۔ جب دیکھیں کہ پتے بھننے پر آگئے تو پتیلی کا ڈھکنا آٹے سے بند کر دیں اور منہ بند پتیلی کو ہر چند منٹ بعد آہستہ آہستہ ہلادیں۔ تقریباً آدھے گھنٹے بعد پتیلی چولھے پر سے اتار لیں۔

قیمہ اور گھیا
اجزا:
قیمہ( ایک پائو)
لوکی (ایک عدد)
گھی( آدھا پائو )
پسی ہوئی لال مرچ( حسب ضرورت)
دھنیا( حسب ضرورت)
نمک( حسب ضرورت )
کالی مرچ، زیرہ سفید، کھٹائی (حسب ضرورت)
پیاز( دو گٹھی )
ہرا دھنیا اور ہری مرچ (حسب ضرورت)

ترکیب:
لوکی کا چھلکا اتار لیجیے اس کا گودا جس میں بیج ہوتے ہیں وہ بھی نکال دیجیے۔ باقی لوکی کے اس طرح چھوٹے چھوٹے ٹکڑے کرلیجیے، جیسے اس کا قیمہ تیا رکیا جا رہا ہے۔ گوشت کے قیمہ میں تھوڑا سا نمک ملاکر رکھ دیجیے۔ اب گھی میں پیاز کے تھوڑے سے لچھے تیار کر کے قیمہ میں ملا دیں اور اس کے اوپر پسا ہوا گرم مسالا ڈال دیں۔ صرف چند منٹ کے لیے پتیلی دَم پر رہنے دیں، پھر اتار لیں۔

اب ہری مرچیں اور دھنیا کاٹ کر سالن پر چھڑک دیں۔ کوشش کریں پیاز کے لچھوں کی شکل برقرار رہے۔ ورنہ یہ گھل کر سالن کو میٹھا میٹھا کر دے گی۔ اگر آپ کو قیمہ پیاز کے سالن کا میٹھا میٹھا سا ذائقہ پسند ہو تو پھر پیاز کو بھوننے کے کسی مرحلہ پر پتیلی میں ڈال دیجیے لیکن اسی کے ساتھ کھٹائی کا پانی بھی تیار رکھیے، تاکہ اگر سالن تیاری کے آخری مرحلہ پر چکھنے کے بعد ضرورت سے زیادہ میٹھا معلوم ہو تو اس میں کھٹائی کا تھوڑا سا پانی ڈال کر ذائقہ صحیح کرسکیں۔

کھنڈوی کا سالن
اجزا:
بیسن (ایک پائو) چھان لیں
درمیانی پیاز (ایک عدد)
ہرا دھنیا (تھوڑا سا)
ہری مرچ (چھے عدد)
سرخ مرچ (ایک چائے کا چمچا)
زیرہ ایک (آدھا چائے کا چمچا)
نمک (حسب ذائقہ)
شوربہ بنانے کے لیے
بڑی پیاز (ایک عدد)
ٹماٹر (چار عدد)کاٹ لیں
ہری مرچ (پانچ عدد) درمیان سے کٹ لگالیں
ہرا دھنیا (حسب ضرورت)
ادرک لہسن کا آمیزہ (دو چائے کے چمچے)
پسی ہوئی لال مرچ (ایک چائے کا چمچا)
پسا ہوا دھنیا (ایک چائے کا چمچا)
پسی ہوئی ہلدی (چوتھائی چائے کا چمچا)
نمک (حسب ذائقہ)
پکوان تیل (آدھی پیالی)

ترکیب :
بیسن چھان لیں اور پیاز باریک کتر لیں۔ ایک پین لے کر اس میں ایک گلاس پانی ڈالیں۔ اب اس میں کھنڈوی کے سارے مسالے ڈال دیں اور ابال آنے تک ڈھکنا ڈھانک دیں۔ ابال آنے کے بعد اس میں بیسن ڈال کر تیزی سے ملالیں لیں اور اتنا پکائیں کہ ایک پیسٹ سا بن جائے جیسے سوجی یا دال کا حلوہ بنانے کے لیے بنایا جاتا ہے پھر ایک ٹرے میں آئل لگاکر حلوہ کی طرح یہ پیسٹ جمالیں۔ جب تھوڑا ٹھنڈا ہوجائے تو اس کے پیس کاٹ لیں جیسے حلوہ کے کاٹتے ہیں۔

شوربے کے لیے ایک پتیلی میں پکوان تیل گرم کرلیں، اب اس میں پیاز گلابی ہونے تک تلیں۔ پھر اس میں لہسن ادرک کا آمیزہ ڈال کر ہلکا سا تل لیں اور سارے مسالے اور تھوڑا سا پانی ڈال کر بھونیں اور اس کے بعد اس میں ٹماٹر اور ہری مرچ شامل کر کے اچھی طرح بھون لیں، جب مسالا تیل چھوڑ دے، تو اس میں دو گلاس پانی ڈال دیں، جب پانی اُبل جائے، تو اس میں کھنڈویاں ڈال کر دس منٹ تک پکائیں اور پھر ہرا دھنیا چھڑک کر پیش کریں۔



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے