لاہور شہر میں لاک ڈائون کے فیصلے پر سختی سے عملدرآمد کرانے کا فیصلہ، انتظامیہ نے تیاری پکڑ لی

لاہور شہر میں لاک ڈائون کے فیصلے پر سختی سے عملدرآمد کرانے کا فیصلہ، انتظامیہ نے تیاری پکڑ لی


لاہور شہر میں لاک ڈائون کے فیصلے پر سختی سے عملدرآمد کرانے کا فیصلہ، …

لاہور (ویب ڈیسک) صوبائی دارالحکومت لاہور میں صبح 8 بجے سے رات 8 بجے کی چھوٹ کے بعد باہر آنے والے شہریوں سے سختی سے نمٹنے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔لاہور کے داخلی اور خارجی راستوں کے بعد شہر کی اہم شاہراہوں پر بھی اب سختی ہوگئی۔

خیال رہے کہ شہر میں مارکیٹیں اور دکانیں بند ہونے کے بعد بھی شہری بلا ضرورت گھومتے پھرتے نظر آتے تھے۔اب انتظامیہ نے غیر ضروری طور پر باہر آنے والے شہریوں سے حتمی طور پر نمٹنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔ ایمبولینس، گڈز ٹرانسپورٹ، میڈیا، ڈاکٹرز اور پولیس کے علاوہ غیر ضروری افراد کو باہر نکلنے والوں کے خلاف کارروائی ہوگی۔ ایسے تمام افراد کیخلاف دفعہ 144 کی کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

سی سی پی او لاہور کی جانب سے جاری ہدایت میں شہریوں سے کہا گیا ہے کہ وہ صبح 8 سے رات 8 کے درمیان اپنے ضروری کام نمٹا لیں۔ رات 8 بجے کے بعد شہری غیر ضروری طور پر گھروں سے باہر نہ نکلیں۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے