’ماں کی جانب سے گلے لگانا سب سے بہترین دوا ہے‘ جاپانی تحقیق کاروں کا حیران کن انکشاف

’ماں کی جانب سے گلے لگانا سب سے بہترین دوا ہے‘ جاپانی تحقیق کاروں کا حیران کن انکشاف


’ماں کی جانب سے گلے لگانا سب سے بہترین دوا ہے‘ جاپانی تحقیق کاروں کا حیران …

ٹوکیو(مانیٹرنگ ڈیسک) یہ ایک عالمگیر سچائی ہے کہ دنیا میں ماں کی محبت کا کوئی متبادل نہیں۔ اب جاپان کے ماہرین نے اس حوالے سے اپنی تحقیق میں ایک حیران کن انکشاف کر دیا ہے۔ میل آن لائن کے مطابق ماہرین نے اس تحقیق کے نتائج میں بتایا ہے کہ ماں کا بچے کو گلے لگانا بہترین دوا ہے جو بچے کی صحت پر حیران کن اثرات مرتب کرتا ہے۔ اس تحقیق میں سائنسدانوں نے نوعمر بچوں کے دل کی دھڑکن کو مختلف صورتحال میں جانچا اور نتائج مرتب کیے۔

نتائج میں معلوم ہوا کہ جب ماں بچے کو گلے لگاتی ہے تو اس کے دل کی دھڑکن میں وقفہ بڑھ جاتا ہے، جس کا مطلب ہے کہ بچہ پہلے سے زیادہ پرسکون ہو جاتا ہے۔ماہرین کا کہنا تھا کہ بچے کو اوائل عمری میں ماں کا گلے لگانا آئندہ زندگی میں بچے اور ماں باپ کے تعلق کی بنیاد رکھتا ہے اور اس کے لیے انتہائی ناگزیر ہے۔جن بچوں کی مائیں انہیں گلے لگاتے اور پیار کرتے ہیں وہ دوسرے بچوں کی نسبت بہت زیادہ پرسکون رہتے ہیں اور نتیجتاً ان کی صحت بھی بہتر رہتی ہے۔تحقیق میں ماہرین نے اجنبی لوگوں کے بچوں کو گلے لگانے کا بھی تجزیہ کیا لیکن اس میں بچوں پر وہ اثرات نہیں دیکھے گئے جو ماں اور باپ کے گلے لگانے سے دیکھنے میں آئے۔تاہم ماہرین نے ماں باپ کو یہ نصیحت بھی کی کہ بچوں کو زیادہ زور سے گلے مت لگائیں کیونکہ اس تحقیق میں جب ماں باپ نے بچے کو زور سے گلے لگایا تو بچے کے دل کی دھڑکن سست ہونے کی بجائے زیادہ تیز ہو گئی۔

مزید : ڈیلی بائیٹس



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے