”مصباح الحق کا نام وزیراعظم کیلئے تجویز نہیں کیا گیا“ عامر سہیل ایک مرتبہ پھر ’پھٹ‘ پڑے

”مصباح الحق کا نام وزیراعظم کیلئے تجویز نہیں کیا گیا“ عامر سہیل ایک مرتبہ پھر ’پھٹ‘ پڑے


”مصباح الحق کا نام وزیراعظم کیلئے تجویز نہیں کیا گیا“ عامر سہیل ایک مرتبہ …

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے چیف سلیکٹر و ہیڈ کوچ مصباح الحق سابق کرکٹر کے ’ریڈار‘پر آ گئے اور محمد یوسف کے بعد عامر سہیل نے بھی ان پر تنقید کے نشتر برسا دئیے ہیں جن کا کہنا ہے کہ مصباح الحق کا نام وزیر اعظم کیلئے تجویز نہیں کیا دیگر تمام ذمہ داریاں بھی انہیں ہی سونپ دیں۔

تفصیلات کے مطابق محمد یوسف اور دیگر کرکٹرز مصباح الحق کو ہیڈ کوچ اور چیف سلیکٹر کی دہری ذمہ داریاں دینے کے فیصلے پر پی سی بی کو سخت تنقید کا نشانہ بناتے رہے ہیں۔ مایہ ناز سابق کپتان عامر سہیل بھی ان کھلاڑیوں میں شامل رہے جنہوں نے ایک مرتبہ پھر طنز کرتے ہوئے کہا ہے کہ بورڈ نے مصباح الحق کا نام وزیر اعظم کیلئے تجویز نہیں کیا، دیگر تمام تر ذمہ داریاں بھی انہیں سونپ دیں،اس میں کوئی شک نہیں کہ وہ ایک اچھے کرکٹر تھے لیکن ان کو اتنے بڑے عہدوں پر کام کرنے کا کوئی تجربہ ہی نہیں، اسی وجہ سے وہ ہیڈ کوچ اور چیف سلیکٹر کا دہرا بوجھ اٹھانے میں ناکام رہے ہیں،ایک ساتھ اتنی بڑی ذمہ داریاں دینا خود ان کے ساتھ بھی ناانصافی ہے۔

ایک سوال پر عامر سہیل نے کہا کہ کیریئر کے آغاز میں شعیب اختر بھی تنازعات میں الجھے رہتے تھے،میں نے ان کی ذمہ داری اٹھائی اور انہیں جھگڑوں سے دور رکھنے میں کردار ادا کیا،ان کو نصیحت کی کہ دیگر چیزوں کو بھول کر صرف اپنی کرکٹ پر توجہ دو لیکن کسی نے بھی عمراکمل کے معاملات کو پیشہ ورانہ انداز میں دیکھنے کی کوشش نہیں کی، ارباب اختیار کی اسی سوچ نے مڈل آرڈر بیٹسمین کا کیریئر تباہ کردیا۔

سابق کپتان نے میریلیبورن کرکٹ کلب (ایم سی سی) ٹیم کو پاکستان آنے پر قائل کرنے والے پی سی بی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر (سی ای او) وسیم خان کی کوششوں کو سراہتے ہوئے کہا کہ چیف ایگزیکٹیو پی سی بی کے انگلینڈ میں اچھے تعلقات ہیں، وہ انگلش ٹیم کو دورئہ پاکستان پر آمادہ کرنے میں بھی کردار ادا کرسکتے ہیں۔

مزید : کھیل



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے