”میں زخمی انگوٹھے کیساتھ کھیل رہا تھا اور یہ بھی سوچ لیا تھا کہ اب کوئی میچ نہیں کھیلوں گا لیکن پھر۔۔۔“ شاہین شاہ آفریدی نے حیران کن انکشاف کر دیا

”میں زخمی انگوٹھے کیساتھ کھیل رہا تھا اور یہ بھی سوچ لیا تھا کہ اب کوئی میچ نہیں کھیلوں گا لیکن پھر۔۔۔“ شاہین شاہ آفریدی نے حیران کن انکشاف کر دیا


”میں زخمی انگوٹھے کیساتھ کھیل رہا تھا اور یہ بھی سوچ لیا تھا کہ اب کوئی میچ …

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کرکٹ ٹیم کے مایہ ناز نوجوان فاسٹ باﺅلر اور پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) میں لاہور قلندرز کی نمائندگی کرنے والے شاہین شاہ آفریدی نے انکشاف کیا ہے کہ میں انگوٹھے میں فریکچر کے باعث لیگ کے مزید میچز نہ کھیلنے کا سوچ چکا تھا مگر میرے بھائی اور والد نے میرا حوصلہ بڑھایا۔

تفصیلات کے مطابق ایک انٹرویو میں شاہین شاہ آفریدی نے کہا کہ ”میرے باﺅلنگ کرنے والے ہاتھ کا انگوٹھا فریکچر تھا اور میں اسی کیساتھ میچز کھیل رہا تھا اور پھر ایسا وقت بھی آیا جب میں نے سوچ لیا کہ اب میں مزید میچز نہیں کھیلوں گا۔ لیکن میرے والد اور بھائی کی نصیحت نے میرا ذہن بدل دیا جن کا کہنا تھا کہ ٹیم کو میری بہت ضرورت ہے۔“

انہوں نے کہا کہ ”اس طرح کی حوصلہ افزائی اور کوشش نے ہی ہمیں سیمی فائنل پہنچایا حالانکہ ٹورنامنٹ کے ابتداءمیں اکثریت کا یہی خیال تھا کہ لاہور قلندرز کی ٹیم پلے آف مرحلے میں پہنچنے کی اہل ہی نہیں ہے۔ جب ٹورنامنٹ کے بقیہ میچز ہوں گے تو میں امید کرتا ہوں کہ ہم اپنا 100 فیصد دیتے ہوئے فائنل میں کوالیفائی کریں گے اور پھر ٹرافی جیتنے کی بھرپور کوشش کریں گے۔“

مزید : کھیل /PSL /PSL News Update



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے