وہ معروف شخصیت جسےعہدے سے ہٹانے کے بعد دوبارہ عمران خان نے کابینہ میں شامل کرنے کا فیصلہ کر لیا

وہ معروف شخصیت جسےعہدے سے ہٹانے کے بعد دوبارہ عمران خان نے کابینہ میں شامل کرنے کا فیصلہ کر لیا


وہ معروف شخصیت جسےعہدے سے ہٹانے کے بعد دوبارہ عمران خان نے کابینہ میں شامل …

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )چینی بحران سے متعلق ایف آئی اے کی انکوائری رپورٹ کے بعد مشیر وزیراعظم کے عہدے سے ہٹائے جانے والے شہزاد ارباب کو دوبارہ کابینہ میں شامل کرنے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے ۔

نجی انگریزی اخبار ”دی نیوز“کی رپورٹ میں ذرائع کے حوالے سے دعویٰ کیا گیا کہ وہ اس بار شہزاد ارباب وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی کے طور پر خدمات انجام دیں گے۔رپورٹ کے مطابق کہ شہزاد ارباب کو جہانگیر ترین کے ساتھ قریبی وابستگی کی وجہ سے یا چینی بحران کی وجہ سے نہیں ہٹایا گیا تھا بلکہ اس وجہ یہ ہے کہ وزیراعظم بابر اعوان کو ایڈجسٹ کرنا چاہتے تھے۔ذرائع کے مطابق شہزاد ارباب کو اب وزیراعظم کے معاون خصوصی کی حیثیت سے واپس لایا جا رہا ہے اور انہیں وفاقی وزیر کا درجہ ملے گا۔

وزیر اعظم عمران خان کے قریبی ساتھی نے بتایا کہ شہزاد ارباب کو جہانگیر ترین کے ساتھ قریبی تعلقات کی وجہ سے ہٹا دیا گیا تھا۔شہزاد ارباب کابینہ کے واحد رکن تھے جنہیں چینی بحران سے متعلق ایف آئی اے کی رپورٹ کے بعد کابینہ سے نکالا گیا جب کہ باقی افراد کے قلمدان تبدیل کئے گئے تھے۔ایف آئی اے کی انکوائری رپورٹ میں براہ راست یا بالواسطہ نامزد افراد میں مشیر صنعت و تجارت رزاق داو¿د، وفاقی وزیر برائے فوڈ سیکیورٹی خسرو بختیار اور جہانگیر ترین شامل تھے۔

مزید : اہم خبریں /قومی



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے