وہ ملک جس نے اپنے لوگوں کی فلاح کیلئےامریکا اور برطانیہ کو بھی پیچھے چھوڑ دیا،دنیا کے سب سے بڑے فلاحی پیکج کااعلان

وہ ملک جس نے اپنے لوگوں کی فلاح کیلئےامریکا اور برطانیہ کو بھی پیچھے چھوڑ دیا،دنیا کے سب سے بڑے فلاحی پیکج کااعلان


وہ ملک جس نے اپنے لوگوں کی فلاح کیلئےامریکا اور برطانیہ کو بھی پیچھے چھوڑ …

ٹوکیو(ڈیلی پاکستان آن لائن)کورونا وائرس کی وجہ سے دنیا بھر میں بے چینی اور اضطراب پھیل رہا ہے۔ ایسے میں جہاں دنیا کی بڑی بڑی ریاستوں نے اپنے شہریوں کی فلاح کیلئے اقدامات کئے ہیں وہیں جاپان نے سب کو پیچھے چھوڑ دیا ہے۔

برطانوی خبرایجنسی رائٹرز کے مطابق جاپان کے وزیراعظم شینزوایبے نے منگل کو کورونا وائرس ایمرجنسی کے نفاذ سے قبل اپنا منصوبہ پیش کردیا ہے جسے انہوں نے دنیا کا سب سے بڑا فلاحی پیکج بھی قرار دیا ہے۔ جاپان میں اس وقت کورونا سے متاثرہ افراد کی تعداد چار ہزار سے تجاوز کرچکی ہے جبکہ اب تک 93افراد ہلاک بھی ہوچکے ہیں۔

رائٹرز کے مطابق جاپانی وزیر اعظم ایک ٹریلین ڈالرز یعنی ایک ہزار ارب ڈالرز کے ایمرجنسی پلان کا اعلان کرنے جارہے ہیں۔ خیال رہے امریکا نے تینتیس کروڑ لوگوں کیلئے دو ٹریلین ڈالرز کا جبکہ جاپان نے بارہ کروڑ لوگوں کیلئے ایک ٹریلین ڈالرز کااعلان کیاہے۔ برطانیہ نے اس وائرس سے بچاو کیلئے تین سو نوے ارب ڈالرز کے پیکج کااعلان کررکھا ہے۔

رائٹرز کے مطابق ایبے دارالحکومت ٹوکیو سمیت چھ دیگر بڑے شہروں میں ریاستی ایمرجنسی نافذکرنے جارہے ہیں جو ایک ماہ تک نافذ رہے گی۔ ایمرجنسی لگانے کا فیصلہ ماہرین کے ایک پینل کی جانب سے اجازت ملنے کے بعد کیاگیا ہے۔ ان کی کابینہ ایک سو آٹھ ٹریلین ین یعنی نو سے نوے ارب ڈالرز کے پیکج کو حتمی شکل دے گی، یہ رقم  دنیا کی تیسری بڑی معیشت (جاپان) کی مجموعی رقم کا بیسواں حصہ ہے۔

رائٹرز کے مطابق جاپانی حکومت کا امدادی پیکج امریکی حکومت سے گیارہ فیصد جبکہ جرمن حکومت سے پانچ فیصد بڑا ہے۔

 پارلیمنٹ سے خطاب کرتے ہوئے شینزوایبے نے کہا کہ اگر ایمرجنسی نہ لگائی گئی تو بڑے تعداد میٰں زندگیوں کو خطرہ لاحق ہوسکتا ہے۔

مزید : بین الاقوامی /کورونا وائرس



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے