”پورا ملک خوشی سے اچھل رہا تھا اور ماحول شاندار تھا لیکن۔۔۔“ پی ایس ایل فائیو کیلئے پاکستان آنے والے مائیکل سلیٹر نے بھارتیوں کو پھر ’مرچی‘ لگا دی

”پورا ملک خوشی سے اچھل رہا تھا اور ماحول شاندار تھا لیکن۔۔۔“ پی ایس ایل فائیو کیلئے پاکستان آنے والے مائیکل سلیٹر نے بھارتیوں کو پھر ’مرچی‘ لگا دی


”پورا ملک خوشی سے اچھل رہا تھا اور ماحول شاندار تھا لیکن۔۔۔“ پی ایس ایل …

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) آسٹریلین کرکٹ ٹیم کے مایہ ناز سابق اوپننگ بلے باز مائیکل سلیٹر نے پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) کو شاندار ٹورنامنٹ قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ میرا دورہ پاکستان یادگار ہے کیونکہ پورا ملک خوشی سے اچھل رہا تھا اور ماحول شاندار تھا۔

تفصیلات کے مطابق انسٹاگرام ویڈیو میں گفتگو کرتے ہوئے مائیکل سلیٹر نے کہا کہ ”یہ بہت ہی شاندار ٹورنامنٹ تھا اور پاکستان میں ہونا میرے لئے اعزاز کی بات تھی، ہم ٹورنامنٹ کے اختتام پر پہنچ ہی گئی تھے مگر بدقسمتی سے کورونا وائرس کے باعث اسے ملتوی کرنا پڑ گیا، پورا ملک خوشی سے اچھل رہا تھا اور ماحول شاندار تھا۔“

انہوں نے کہا کہ ” ملتان سلطانز کو ٹرافی دینا ٹھیک ہوتا کیونکہ کھلاڑیوں کی دستیابی میں مشکلات اور سخت شیڈول کے باعث پلے آف مرحلے کیلئے واپس آنا آسان نہیں ہو گا، ہم نے آسٹریلیا کے ڈومیسٹک ٹورنامنٹس میں بھی ایسے ہی کیا ہے۔“

جب ان سے پاکستان کے بابراعظم، بھارت کے ویرات کوہلی اور انگلینڈ کے جو روٹ کے موازنے سے متعلق پوچھا تو ان کا کہنا تھا کہ ”اگر آپ سب سے بہترین کے بارے میں پوچھ رہے ہیں تو یہ ویرات کوہلی ہے۔ ان کی کپتانی کا طریقہ کار گزشتہ تمام بھارتی کپتانوں سے مختلف ہے اور تکنیکی طور پر وہ دنیا کے سب سے بہترین کھلاڑی ہیں۔“

مزید : کھیل /PSL /PSL News Update



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے