کورونا لاک ڈاؤن کے باعث برطانیہ میں فراڈ اور قانون شکنی کے واقعات بڑھ گئے

کورونا لاک ڈاؤن کے باعث برطانیہ میں فراڈ کے واقعات بڑھ گئے


کورونا لاک ڈاون کے باعث برطانیہ میں فراڈ اور قانون شکنی کے واقعات بڑھ گئے، گھریلو تشدد کے واقعات میں بھی اضافہ ہو گیا اور کرفیو کی خلاف ورزیاں بھی جاری ہیں۔

برطانوی حکام نے لندن میں پریس کانفرنس میں بتایا کہ کورونا کے نام پر ایک اعشاریہ آٹھ ملین کا فراڈ کر چکے ہیں، ہوم سیکرٹری پریتی پٹیل نے بتایا کہ ملک میں گھریلو تشدد کے واقعات میں ایک سو بیس فیصد تک اضافہ ہوا ہے، سماجی دوری اختیار نہ کرنے کے ایک ہزار ستاسی واقعات رپورٹ ہوئے جنہیں بھاری جرمانے کیئے گئے ہیں۔

پریتی پٹیل نے کہا کہ خطرات سے دوچار افراد کی مدد کے لیے کیلئے نیشنل کمیونٹی کمیشن کے تحت مہم چلائی جائےگی۔ آن لائن سپورٹ سروس اور ہیلپ لائن کیلئے مزید دو ملین پاؤنڈ دیئےجائیں گے۔

حکام نے کہا ہے کہ وبا کے باوجود پولیس مجرموں کے خلاف سرگرم ہے، قانون توڑنے والوں کے خلاف سخت کارروائیاں کی جارہی ہیں۔

لاک ڈاون میں نرمی کا فیصلہ سائنسی ماہرین سے مشاورت کے بعد ہی کیا جائے گا۔



install suchtv android app on google app store

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے