کورونا وائرس، متحدہ عرب امارات نے اپنے شہریوں کو واپس نہ بلانے والے ممالک کے خلاف سخت قدم اٹھانے کا فیصلہ کر لیا

لائن آف کنٹرول پار کرکے آزاد کشمیرمیں گھسنے والا بھارتی جاسوس پکڑا گیا


کورونا وائرس، متحدہ عرب امارات نے اپنے شہریوں کو واپس نہ بلانے والے ممالک کے …

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن ) متحدہ عرب امارات نے واضح کیا ہے کہ وہ ان ممالک سے تعلقات پرنظر ثانی کررہا ہے جو اپنے شہریوں کو واپس نہیں بلا رہے ہیں۔

” خلیج ٹائمز “ کی رپورٹ کے مطابق متحدہ عرب امارات نے کہا ہے کہ تمام ممالک کو اپنے شہریوں کی ذمہ داری لینی چاہیے ، یو اے ای ایسے ممالک سے پرائیوٹ سیکٹر میں بھرتیوں پر پابندی لگا سکتا ہے۔متحدہ عرب امارات کی جانب سے یہ فیصلہ ایسے وقت میں کیا گیاہے جبب بیشتر ممالک نے اپنے شہریوں کی درخواستوں پر کوئی اقدام نہیں اٹھایا ہے جو کہ اپنے وطن واپس جانا چاہتے ہیں ۔

خلیجی اخبار کا اپنی رپورٹ میں کہناتھا کہ متحدہ عرب امارات کی جانب سے ایسے ممالک سے بھرتیوں پر پابدی بھی لگائی جاسکتی ہے جبکہ کوٹا سسٹم کابھی اطلاق کیا جا سکتا ہے ۔

رپورٹ میں بتایا گیا کہ یو اے ای اپنے شہریوں کو واپس نہ بلانے والے ممالک کے ساتھ مفاہمت کی یاد داشتیں بھی منسوخ کرسکتا ہے۔

دنیا کو جب سے عالمی وبا کورونا وائرس نے اپنی جکڑ بندیوں میں لیا ہے اس وقت سے تمام ممالک کی کوشش اور خواہش ہے کہ ان کے ممالک میں مقیم غیر ملکی اپنے وطن واپس جائیں تاکہ ان کے محکمہ صحت پہ بہت زیادہ دباو نہ آئے۔عالمی ذرائع ابلاغ بتا رہے ہیں کہ اس وقت کورونا وائرس کی وجہ سے امریکہ، برطانیہ، فرانس، اٹلی، جرمنی اور اسپین جیسے ترقیافتہ ممالک کا نظام صحت پڑنے والے دباو کی وجہ سے بری طرح ہانپنے لگا ہے۔

مزید : بین الاقوامی



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے