کورونا وائرس انسانی جسم میں داخل کیسے ہوتا ہے؟ پہلی مرتبہ تصاویر سامنے آگئیں

کورونا وائرس انسانی جسم میں داخل کیسے ہوتا ہے؟ پہلی مرتبہ تصاویر سامنے آگئیں


کورونا وائرس انسانی جسم میں داخل کیسے ہوتا ہے؟ پہلی مرتبہ تصاویر سامنے آگئیں

برازیلیا(مانیٹرنگ ڈیسک) برازیل میں سائنسدانوں نے انتہائی طاقتور مائیکروسکوپ کی مدد سے پہلی بار یہ معلوم کر لیا ہے کہ کورونا وائرس انسانی خلیے میں کیسے داخل ہوتا ہے اور اس طرزعمل کا مظاہرہ کرتا ہے۔ میل آن لائن کے مطابق اوسوالڈو کروز فاﺅنڈیشن کے ماہرین نے اس مائیکروسکوپ کی مدد سے ایک صحت مند خلیے کو دیکھنا شروع کیا جس میں کورونا وائرس داخل ہونے کی کوشش کر رہا تھا۔ اس کے بعد ماہرین نے ہر مرحلے کی تصاویر بنائیں اور دنیا کو دکھا دیا کہ یہ کس طرح انسانوں کو متاثر کرتا ہے۔

ان میں سے پہلی تصویر میں کئی موذی وائرس ’سیل ممبرین‘ سے خلیے کے اندر داخل ہونے کی کوشش کر رہے ہوتے ہیں۔ خلیے کے اندر جا کر وہ سیل سائٹوپلازم میں ٹھہرتے اور اپنی افزائش کرتے ہیں اور پھر سیل نیوکلیئس میں داخل ہو جاتے ہیں۔ یہ وہ وقت ہوتا ہے جب مریض میں انفیکشن شروع ہوتی ہے۔ یہ وائرس اپنی تعداد بڑھاتا چلا جاتا ہے اور ایک ایک کرکے خلیوں کے اندر گھس کر ان کے نیوکلیئس پر قبضہ کرتا چلا جاتا ہے جس سے مریض میں علامات شدت اختیار کرتی چلی جاتی ہیں۔سائنسدانوں کا کہنا تھا کہ اس تحقیق میں جو خلیے استعمال کیے گئے وہ انسان کے نہیں بلکہ بندر کے تھے اور اس میں جو مائیکروسکوپ استعمال کی گئی وہ نارمل سائز کو 20لاکھ گنا بڑا کرنے کی صلاحیت رکھتی ہے، جس کی وجہ سے سائنسدان خلیے کے اندر وائرس کی سرگرمیاں دیکھنے کے قابل ہوئے۔

مزید : تعلیم و صحت /کورونا وائرس



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے