کورونا وائرس مبینہ طور پر 900 مزدوروں کو نوکری سے نکالنے پر پاکستان کے امیر ترین آدمی میاں منشاءپر سوشل میڈیا پر تنقید

کورونا وائرس مبینہ طور پر 900 مزدوروں کو نوکری سے نکالنے پر پاکستان کے امیر ترین آدمی میاں منشاءپر سوشل میڈیا پر تنقید


کورونا وائرس، مبینہ طور پر 900 مزدوروں کو نوکری سے نکالنے پر پاکستان کے امیر …

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) کورونا وائرس کی وجہ سے پاکستان کے امیر ترین آدمی میاں منشاءنے مبینہ طور پر 900مزدوروں کو نوکری سے نکال دیاجس پر سوشل میڈیا صارفین انہیں کڑی تنقید کا نشانہ بنا رہے ہیں۔ ویب سائٹ پڑھ لوکے مطابق نشاط گروپ سے فارغ ہونے والے ان مزدوروں میں سے ایک نے ویڈیو بنا کر سوشل میڈیا پر پوسٹ کی ہے اور دنیا کو اس واقعے کے متعلق تفصیل سے بتایا۔

اس ورکر نے بتایا کہ ”نشاط گروپ نے بغیر نوٹس کے ساڑھے آٹھ سو سے نو سو ورکرز کو ایک ہی دن نوکری سے نکال دیا۔ ہم ایک روز کام پر گئے اور بائیومیٹرک طریقے سے حاضری لگا کر گیٹ سے اندر داخل ہوئے۔ جب ہم کام ختم کرکے گھر جانے لگے تو ہمارے بائیومیٹرک ویریفکیشن نے کام چھوڑ دیا۔ ہم نے ایچ آر ڈیپارٹمنٹ سے رابطہ کیا تو انہوں نے بتایا کہ جن لوگوں کی ویریفکیشن نہیں ہو سکی انہیں نوکری سے نکال دیا گیا ہے۔ ہم نے ان سے کہا کہ ایسے کیسے نوکری سے نکال سکتے ہو تو انہوں نے کہا کہ ’تم جو کر سکتے ہو کر لو، لیبر کورٹ میں کیس کرنا ہے تو کروا دو، اب تمہارا کچھ نہیں ہونے والا۔‘

یہ ویڈیو انٹرنیٹ پر تیزی سے وائرل ہو رہی ہے اور صارفین میاں منشا کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے نشاط گروپ کا بائیکاٹ کرنے کا مطالبہ کر رہے ہیں۔ محسن ابدالی نامی صارف نے لکھا ہے کہ ”پاکستان کا امیر ترین آدمی ان لوگوں کو ایک مہینے کی تنخواہ نہیں دے سکتا جنہوں نے اپنی زندگیاں اس کے بزنس کو دے دیں۔یہ شرمناک طرز عمل ہے۔ نشاط کا بائیکاٹ کرو۔“

مزید :

بین الاقوامی



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے