کورونا وائرس : کویت حکومت کے بہترین احتیاطی اقدامات کے باوجود متاثرہ افراد کی تعداد میں اضافہ

کورونا وائرس


خلیجی ریاست کویت میں حکومت کے بہترین احتیاطی اقدامات کے باوجود کورونا وائرس کے مریضوں کی گنتی میں ہر گزرتے دن کے ساتھ اضافہ ہوتا چلا جا رہا ہے۔

مملکت میں گزشتہ 24 گھنٹوں میں مزید 83 افراد میں کورونا وائرس کی تصدیق ہو گئی، جن میں 8 پاکستانی بھی شامل ہیں۔ وزارت صحت کے مطابق نئے مریضوں میں کورونا کی تشخیص کے بعد مملکت میں اس موذی وائرس سے متاثرہ افراد کی گنتی 993 تک جا پہنچی ہے۔ وزارت صحت کے ترجمان ڈاکٹر عبداللہ السند نے بتایا کہ کورونا کے تازہ متاثرین میں51 بھارتی، 7 بنگالی،2 کویتی، 8 پاکستانی، 5نیپالی، 3 مصری، 1 فلپائنی اور 1شامی باشندہ شامل ہے۔کورونا کے تازہ ترین کویتی مریض بیرون ملک سے آئے تھے۔ جبکہ دیگر مریض مقامی طور پر کورونا متاثرین سے میل جول رکھنے کے باعث اس موذی مرض کا شکار ہوئے۔

اس کے علاوہ کچھ افراد کو کورونا کے شبے میں قرنطینہ میں رکھا گیا ہے ۔اس وقت کورونا کے 10 مریضوں کی حالت نازک ہے، جنہیں انتہائی نگہداشت کے وارڈ میں رکھا گیا ہے۔ مملکت میں گزشتہ روز مزید 12 افراد کورونا سے صحت یاب ہو گئے ہیں۔ جس کے بعد کویت میں کورونا سے شفا پانے والوں کی کل گنتی 123 ہو گئی ہے۔ جبکہ باقی قرنطینہ مراکز میں زیر علاج ہیں۔گزشتہ چند روز کے دوران بھی درجنوں پاکستانیوں میں کورونا کی تشخیص ہوئی تھی۔واضح رہے کہ گزشتہ ہفتہ کے روز بھارت سے تعلق رکھنے والا 46سالہ مریض زندگی کی بازی ہار گیا تھا۔

یہ شخص کئی دنوں سے انتہائی نگہداشت کے شعبے میں داخل تھا، تاہم اس کی تشویش ناک حالت میں سدھار نہ آ سکا اور دنیا سے کوچ کر گیا۔کویتی حکومت نے کورونا پر قابو پانے کے سلسلے میں کڑے انتظامات کر رکھے ہیں۔ اسی سلسلے میں دو علاقوں جلیب الشیوخ اور مہبولہ کو مکمل طور پر بند کر دیا گیا ہے جہاں غیر ملکیوں کی بڑی تعداد آباد ہے۔ترجمان ڈاکٹر عبداللہ السندنے لوگوں کو تاکید کی کہ وہ خود کو گھروں تک ہی محدود رکھیں، تاکہ کورونا کے وار سے ممکنہ حد تک محفوظ رہ سکیں۔



install suchtv android app on google app store

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے