کورونا وائرس کے وار جاریدنیا بھرمیں ایک لاکھ 53ہزار افراد ہلاک لیکن مزید کتنے کیسز سامنے آئے؟ افسوسناک خبر

mobile logo


کورونا وائرس کے وار جاری،دنیا بھرمیں ایک لاکھ 53ہزار افراد ہلاک لیکن مزید …

واشنگٹن/لندن/برسلز(ڈیلی پاکستان آن لائن)2019کے اختتام پر منظر عام پر آنے والے خاموش قاتل اور ان دیکھے دشمن کوروناوائرس نے چندماہ میں پوری دنیا کو اپنی لپیٹ میں لے لیا ہے جبکہ ڈیڑھ لاکھ سے زائدافراد لقمہ اجل بن چکے ہیں۔ اس وائرس کو شکست دینے والوں کی تعداد 568,343ہوچکی ہے۔

بین الاقوامی میڈیا رپورٹس کے مطابق  دنیا بھر میں کورونا وائرس سے متاثر ہونے والے افراد کی تعداد 22 لاکھ سے تجاوز کر گئی ہے جبکہ153,822

افراد ہلاک ہوئے ہیں۔

گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران دنیا بھرمیں 8500سے زائد افراد ہلاک ہوئے ہیں جبکہ اب تک مجموعی طورپر پانچ لاکھ ستر ہزار سے زائد افراد کورونا وائرس کو شکست دے کر صحتیاب ہو چکے ہیں۔

امریکہ سب سے زیادہ متاثر ہوا ہے جہاں 706,880 متاثرین کی تصدیق ہو چکی ہے اور 32,230اافراد ہلاک ہوئے ہیں۔

امریکہ کے بعد سب سے زیادہ ہلاکتیں اٹلی میں ہوئی ہیں جہاں 22,745افراد ہلاک ہوئے، رجسٹرڈ کیسز کی تعداد172,434ہوگئی ہے جبکہ 42,727 افراد صحتیاب ہوئے۔ اٹلی کے بعد سب سے زیادہ ہلاکتیں سپین میں ہوئی ہیں جہاں 20,002 افراد لقمہ اجل بنے جبکہ وہان پر رجسٹرڈ کیسز کی تعداد190,859ہے اب تک 72,963 افراد صحتیا ب بھی ہوئے ہیں۔ اسی طرح فرانس میں 18,681افراد ہلاک ہوچکے، مریضوں کی تعداد 109,252ہوچکی جبکہ 34,420 افراد صحتیاب ہوئے۔

برطانیہ کی بات کریں تو وہاں 108,692مریض ہیں جبکہ 14,576افراد ہلاک ہوچکےہیں۔ 

 بیلجیئم میں اس وقت کورونا وائرس کے 36 ہزار سے زیادہ متاثرین ہیں اور پانچ ہزار سے زیادہ اموات ہوچکی ہیں۔

چین کا شہر ووہان کھلنے کے بعد اعداد و شمار دوبارہ ترتیب دینے پر اموات کی تعداد بڑھ گئی ہے۔چین نے اس بات سے انکار کیا ہے کہ اس نے ووہان میں وبا کی شدت پر پردہ ڈالا ہے جہاں اموات کی تعداد میں 1290 کا اضافہ ہوا ہے جو کہ شہر میں ہونے والی اموات میں 50 فیصد اضافہ ہے۔ ووہان میں کل اموات 3869 ہوگئی ہے۔

ایران کے سرکاری ذرائع ابلاغ کے مطابق وزیر صحت ڈاکٹر سعید نماکی نے کہا ہے کہ حکام ملک کے اکثر صوبوں میں کووڈ 19 کی وبا پر قابو پانے کے قریب ہیں۔

تاہم محکمہ صحت کے ایک اہلکار نے متنبہ کیا ہے کہ کورونا وائرس ایک مرتبہ بھر خزاں کے مہینوں میں زور پکڑ سکتا ہے۔جانز ہاپکنز یونیورسٹی کے اعداد و شمار کے مطابق تاحال ایران میں کورونا وائرس کے مصدقہ متاثرین کی تعداد 79 ہزار سے زیادہ ہے۔اب تک 4900 سے زیادہ اموات ہوچکی ہیں۔

دوسری جانب عالمی ادارہ صحت نے کووڈ 19 کے علاج کے حوالے سے اینٹی باڈیز ٹیسٹ کے فائدہ مندہ ہونے کے حوالے سے اپنے شبہات کا اظہار کیا ہے۔

کئی ممالک نے عندیہ دیا ہے کہ وہ لاکھوں اینٹی باڈیز ٹیسٹ خریدیں گے اور جو لوگ اس وائرس سے متاثر ہونے کے بعد صحت یاب ہو چکے ہیں انہیں امیونٹی پاسپورٹ (وائرس سے مدافعت کی سند) دیے دی جائے گی اور ایسے لوگ اپنے کام پر لوٹ سکتے ہیں۔

برطانوی حکومت نے 35 لاکھ اینٹی باڈیز ٹیسٹ خریدے ہیں لیکن اب تک ان میں سے کوئی ایک بھی استعمال کے لیے قابلِ بھروسہ نہیں۔

ڈبلیو ایچ اور نے خبردار کیا ہے کہ ان ٹیسٹوں پر بہت زیادہ رقم خرچ نہ کیا جائے۔

مزید :

اہم خبریںکورونا وائرس



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے