کیا حکومت نے عوام کو واقعی بارہ سو ارب کا کورونا ریلیف پیکج دیا ہے؟ اصل حقیقت سامنے آگئی، ایک اور جھوٹ پکڑا گیا

کیا حکومت نے عوام کو واقعی بارہ سو ارب کا کورونا ریلیف پیکج دیا ہے؟ اصل حقیقت سامنے آگئی، ایک اور جھوٹ پکڑا گیا


کیا حکومت نے عوام کو واقعی بارہ سو ارب کا کورونا ریلیف پیکج دیا ہے؟ اصل حقیقت …

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن) حکومت کے عوام کو دیئے گئے بارہ سو ارب روپے میں سے اربوں روپے یوٹیلیٹی سٹورز کو دے دیے گئے۔ کورونا ریلیف فنڈ ز میں سے یوٹیلیٹی سٹورز کو پچاس ارب روپے کی منتقلی پر قمر الزمان کائرہ نے حکومت کو آڑے ہاتھوں لے لیا۔  ان کے مطابق حکومت نےیوٹیلیٹی سٹورز کو جو پیسہ دیا ہے وہ ادارہ اس فنڈز سے بھی آدھی رقم کی کل سیل کرتا ہے۔ ایسے میں اس سے مجموعی کمائی سے ڈبل کی سبسڈائزڈ اشیا دے دینا مناسب نہیں۔

نجی ٹی وی آپ نیوز کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے قمر الزمان کائرہ کہتے ہیں کہ حکومت نے پچاس ارب روپے یوٹیلیٹی سٹورز کو دیئے ، آپ کو حیرت ہو گی کہ گزشتہ برس یوٹیلیٹی سٹورز نے کل چھبیس ارب روپے کی اشیا فروخت کیں، ایک ادارہ جو سارے سال میں ساڑھے چھبیس ارب روپے کی ٹوٹل سیل کرتا ہے،اس کو آپ نے پچاس ارب دیا ہے کہ وہ ایک سال میں پچاس ارب کی سبسڈائز سیل کرے گا؟

انہوں نے کہا اس کا مطلب ہے کہ وہ پچاس فیصد سبسڈی بھی دینا چاہے تو اسے سو ارب روپے کی سیل کرنا ہوگی۔ یوٹیلٹی سٹور اگر مفت بھی مال دے تو اسے اپنی ٹوٹل سیل کے ڈبل سیل کرنا ہوگا۔ اور یہ چھ سو پینسٹھ ارب کا پیکج ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس



جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے